A video on claim made by Asad Kharral raises serious questions for nation.

826
.

Writer is Chief Visionary Officer of World’s First Smart Thinking Tank ”Beyond The Horizon” and most diverse professional of Pakistan. See writer’s profile at http://beyondthehorizon.com.pk/about/ and can be contacted at “pakistan.bth@gmail.com”


اسد کھرل کے دعوے کی ویڈیو جس نے قوم کے سامنے تشویشناک سوال کھڑے کردئیے

احمد جواد

ایک صحافی اسد کھرل نےکھلم کھلا چیلنچ کیا ہے کہ کس طرح نواز شریف اور جنرل کیانی نے2013ء کے انتخابات میں دھاندلی کرکے الیکشن کے نتائج تبدیل کرائے۔اس مضمون کو سمجھنے کے لئے ٹاک شو کی ویڈیو ملاحظہ فرمائیں۔

ہے کوئی فرد یا ادارہ جو  اس طرح کےسنگین الزامات کا جواب دے سکے؟ میرے خیال میں تو کوئی نہیں ہو گا۔

عدلیہ پر ہمارا اعتبار زیادہ تر ڈانواں ڈول ہی رہا۔پانامہ لیکس ہو یا ڈان لیکس یا میمو گیٹ، شرجیل میمن ہو، ڈاکٹر عاصم ہو، ایان علی ہو یا ایبٹ آباد کا سانحہ، 2013ء کے انتخابات ہوں یا جنرل کیانی کے بھگوڑے بھائی کو دوبئی سے واپس لانے کے لئے جاری کیاجانے والا ریڈ وارنٹ جس کے بارے پھر کبھی کچھ نہ سُنا گیا۔ان تمام قومی سانحات کے پس پردہ کچھ فوج اور عدلیہ کے نمائندے سیاسی غرض مندوں سے سمجھوتے کرتے پائے گئے۔ اگراداروں کے سربراہ  اس نوعیت کے سمجھوتے کرنے لگے رہے تو کوئی سی پیک ہمیں غلام قوم بننے سے نہیں روک سکتا۔ان کالی بھیڑوں کی وجہ سے اداروں کی نیک نامی داؤ پر لگ گئی ہے۔اگر جنرل کیانی اور ان کے بھائیوں پر مقدمہ نہیں چل سکتا تو زرداری اور شریف خاندان کیونکر چاہیں گے کہ ان پر مقدمات چلیں۔


A video on claim made by Asad Kharral raises serious questions for nation.

By Ahmad Jawad

A journalist Asad Kharral openly challenged General Kayani and Nawaz Sharif how the results were changed in 2013 elections. See video of talk show for understanding the article.

Does any institution or individual has the courage to challenge such serious allegations. I suppose none.

Our faith in Justice and institutions is highly questionable. Panama Leaks or Dawn Leaks or Memo Gate or Sharjeel Memon or Dr Asim or Ayan Ali, Abbotabad disaster, 2013 elections or even red warrant issued and never heard again which was to bring back Kayani deserter brother from Dubai, Some of Judiciary and Military tops have been found compromising with players of vested interests behind all these national tragedies. If these representatives of national institutions continue with this patter of compromise, no CPEC can save us from the reality of a slave nation under the title of Pakistan. Institutions repute is at stake due to such black sheeps. If General Kayani or his brothers cannot be prosecuted, why Zardari or Sharifs would like to be prosecuted.