A fool generation from 1950 onwards is getting obsolete in the hands of digital generation.

116

Writer is Chief Visionary Officer of World’s First Smart Thinking Tank ”Beyond The Horizon” and most diverse professional of Pakistan. See writer’s profile at http://beyondthehorizon.com.pk/about/ and can be contacted at “pakistan.bth@gmail.com”


انیس صد پچاس سے چلی آنے والی بیوقوف نسل ڈیجیٹل نسل کے ہاتھوں متروک ہو رہی ہے

احمد جواد

حنا بٹ کا ٹویٹ تھا کہ کلثوم نواز کے کتوں کو بھی ووٹ ڈالیں گے۔کسی صاحب نے بڑی مہارت سے طنزکی کہ کتوں کو ووٹ ڈالنے والوں، کھوتے کا گوشت کھانے والوں اور خود کو شیر کہلوانے والوں سے بھلا اور کیا توقع کی جا سکتی ہے۔یہ حقیقی مزاح اس طرح کے لوگوں کے منہ پرطمانچے کے مترادف تھا۔کچھ لوگوں کا خیال ہے کہ اس جملے سے. خواتین اور معمر افراد کی دل آزاری کا پہلو نکلتا ہے۔

مگر میرا نکتہ نظر اس سے کچھ مختلف ہے۔

چور، لٹیرےاور کرپٹ لوگ چاہے نو عمر ہوں یا معمر، مرد ہوں یا خواتین قابل تعظیم نہیں ہوتے۔مسلم اقوام کے زوال کے وقت اسپین کی اسلامی سلطنت ، ترک خلافت عثمانیہ کےدور یا مغلوں کی بادشاہتوں کو  تاریخ میں بے شرموں، بے غیرتوں اور احمقوں  کی فرماں روائی ہی لکھا جاتا ہے۔تاریخ ایسی کسی قوم کو  معاف نہیں کرتی وہ چاہے ماضی میں موجود تھی یا آج کے دور میں لاہور میں بالخصوص حلقہ NA120میں رہ رہی ہے۔

میری نظر میں بنیادی انسانی حقوق کی پاسداری ہی اصل میں باعث تکریم ہے۔یہی امر باعث تشویش ہے جسے  ہم نہ سمجھتے ہیں نہ اس کا احساس کرتے ہیں۔

انیس صد پچاس سےآج تک  چلی آنے والی نسل کےغلط چناؤ کی وجہ سے ہم پر  بھٹو، شریف اور زرداری مسلط ہوگئے اور ہم اپنی آئندہ نسل کو ان کرپٹ خاندانوں کے وارثوں کے سپر د کرکے جارہے ہیں۔سادہ لفظوں میں ہم ہی وہ بے بصیرت اور کم ہمت کھوتے ہیں جو اس ملک کی تباہی کے ذمہ دار ہیں۔

وقت بدل رہا ہے اور ہماری آنے والی نسل ہماری ایک نہیں سنے گی۔ہمارے فرسودہ خیالات متروک ہو چکے اور اب ہر نئے پیداہونے والے ووٹر  کا طرز انتخاب بہتر ہو رہا ہے۔ہم  جیسےمتروک لوگ یا تو پنی اصلاح کرلیں یا اپنے فرسودہ خیالات کی نئی نسل کے ہاتھوں گت بنتی دیکھیں۔ شرمندگی کا یہ منظر اب ہر دوسرے گھر میں دکھائی دیتا ہے۔

فیصلہ آپ خود کرلیں۔


A fool generation from 1950 onwards is getting obsolete in the hands of digital generation.

By Ahmad Jawad

There was a tweet by Hina But that even dogs of Kulsum Nawaz will be voted. Somebody sarcastly but intelligently remarked what do you expect from a nation who votes to dogs, eats donkeys & call themselves Lions. It was wit, reality and slap on such people. Many considered the response violating respect of ladies & elders.

I have a different point of view.

There is no respect for plunderers, looters and corrupt whether elder or younger, male or female. Muslim nation during the time of fall of Islamic rule whether during Spanish rule, ottoman rule or Mughal’s rule are written as shameless, dishonoured and fools. History does not forgive any nation who existed at Such times or it might be existing in Lahore or precisely in NA 120.

For me, respecting basic rights of ordinary human being is the real respect, we should be worried about, which we do not understand & feel.

Generation from 1950 to date made wrong choices and in return brought Bhuttos, Sharifs & Zardari and we are leaving our next generation in the hands of next legacy of corrupt families. We are visionless and gutless. In simple words, we are Khotas responsible for disaster of this country.

Our next generation will not listen to us, times are changing. Everyday with the birth of a new voter, sanity of choice gets better and our obsolete thoughts gets a dent. We are obsolete and we either rectify our thoughts or see embarrassment of our thoughts getting obsolete in the hands of evolution of new generation. Such embarrassment is now happening in every second house.

Make your own judgment.

Facebook Comments