History is not about truth, history is what is made to believe.

903
.

By Ahmad Jawad


Writer is Chief Visionary Officer of World’s First Smart Thinking Tank ” Beyond The Horizon” and most diverse professional of Pakistan. See writer’s profile at http://beyondthehorizon.com.pk/about/. can be contacted at “pakistan.bth@gmail.com”


Today History of World War 2 is not what Germans might have perceived at that time, it is not even what has been written in books and read by some, it is the history which has been shown on Hollywood movies and seen by few billion people on cinema screen or on their television sets.

After Hollywood, Bollywood is second largest film industry and they are following into the footsteps of Hollywood to write the history of Pak India wars in their own script and version.

They are now coming up with “Ghazi” movie which will show their version and their side of story.

We can ban release of this movie in Pakistan but we cannot ban this movie on You tube or Social media.

Questions for us:

1. Where is our movie on M M Alam strike?
2. Where is our movie on Ghazi terror story in 1965 war?
3. Where is our movie on Aziz Bhatti Shaheed while saving Lahore?

and so many heroic incidents of brave soldiers and officers.

History is not what you perceive, history is what is made to believe.

Watch the Indian way of Ghazi in this video clip of Indian movie – Coming Soon.The views of this video clip has already crossed 8 Million people and it will continue to rise.


 

 

تاریخ حقائق کا نام نہیں, تاریخ تو وہ ہے جو آپ کو باور کرائی جاتی ہے

 

احمد جواد

آج جنگ عظیم دوئم کی تاریخ وہ نہیں جس کا ادراک اُس وقت جرمنوں نے کیا تھا۔اس کی تاریخ  تووہ بھی نہیں جو کتابوں میں لکھی اور پڑھی گئی۔تاریخ تو اُسی کو سمجھا جاتا ہے جو ہالی وُڈ کی فلموں میں دکھائی گئی جس کو کروڑوں لوگوں نے پردہ سیمیں یا اپنے ٹی وی کی سکرینوں پر دیکھا۔

ہالی وُڈ کے بعدبالی وُڈ دنیا کی دوسری سب سے بڑی فلم انڈسٹری ہے۔یہ لوگ بھی ہالی وڈ کے نقش قدم پر چلتے ہوئے  پاکستان اور بھارت کے درمیان ہونے والی جنگوںپر اپنے حق میں اپنے ڈھب سے لکھنے میں مصروف ہیں۔

وہ فلم غازی لارہے ہیں جس میں وہ کہانی کااپنا موقف پیش کریں گے۔ہم اس فلم کی نمائش پرپاکستان میں پابندی لگا دیں گے مگریو ٹیوب اور سوشل میڈیا پر اس کی نمائش کیسے روکیں گے۔ ہمارے لئے ان سوالوں کا جواب ملنا ضروری ہے:

  • ایم ایم عالم کی بہادری پر بننے والی ہماری فلم کہاں ہے؟ .
  •  ء1965 ء میں غازی آبدوز نے جو تباہی مچائی تھی اس پر بننے والی ہماری فلم کہاں .   
  • محافظ لاہور عزیز بھٹی کی بہادری پر بننے والی فلم کہاں ہے؟ .

جوانوں اور افسروں کی بہادری کی بے شمار داستانیں  فراموش کردی گئیں۔تاریخ وہ نہیں جس کا آپ کو ادراک ہے بلکہ تاریخ تو وہ ہے جو آپ کو باور کرائی جاتی ہے۔

اس وڈیو کلپ میں غازی پر بنائی جانے والی فلم میں بھارتی موقف ملاحظہ فرمائیں جو جلد آ رہی ہے۔اس کلپ کے ذریعے  بھارتی فلم کےتاثرات  اسی لاکھ افراد تک پہنچ چکے ہیں اور اس تعداد میں برابر اضافہ ہوتا رہے گا۔